سینٹرل جیل کا اسسٹنٹ سب انسپکٹر احسان مہر کو سپاہی بنادیا گیا

غیر قانونی طور پر کیڈربدل کر کلرک، سینئر کلرک بننے کے بعد واپس اسے اے ایس آئی بن گیا تھا
ہوم سکریٹری حکومتِ سندھ نے جیل ملازم کی درخواست پر اسے واپس سپاہی بنا دیا
کراچی(رپورٹ راؤ محمد عدنان) آئی جی جیل خانہ جات مظفر عالم صدیقی کے دستخط سے جاری کردہ آرڈر کے مطابق سینٹرل جیل کے اسسٹنٹ سب انسپکٹر احسان مہر کو سپاہی بنا دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق سینٹرل جیل کراچی کا اے ایس آئی احسان مہر کو سپاہی بنادیا گیا۔تفصیلات کے مطابق احسان مہر جو 2002میں جیل سپاہی بھرتی ہوا۔ بعدازاں اعلیٰ افسران سے سفارش کرواکر کیڈر بدلوا کر کلرک بن گیا اس کے بعد سینئر کلرک بنتے یہ اس نے دوبارہ کیڈر چینج کروا کر اے ایس آئی بن گیا۔ اے ایس آئی احسان مہر سینٹرل جیل کا بے تاج بادشاہ بن گیا روزانہ لاکھوں روپے رشوت کی مد میں کماتا رہا۔ ذرائع کے مطابق چند ہفتے قبل موجود ہوم سکریٹری قاضی کبیر کو موصولہ درخواست پر کاروائی کرتے ہوئے اسے واپس گریڈ 9سے گریڈ 5میں سپاہی بنا دیا گیا سپاہی بننے کے بعد احسان مہر نے سپاہی والا یونیفارم نہیں اور سول کپڑوں میں جیل کے اندر گھوم پھر کر واپس چلاجاتا ہے۔سی سی ٹی وی کیمرے میں بھی اسے دیکھا جاسکتا ہے۔ موجودہ جیل سپرنٹنڈنٹ شاہ نواز خان کو بھی خاطر میں نہیں لاتا۔ واضح رہے کہ اسکی بے شمار شکایتیں ریکارڈ پر موجود ہیں لیکن یہ کہتا ہے کہ اس کا کوئی کچھ نہیں بگاڑ سکتا۔

This post has been Liked 0 time(s) & Disliked 0 time(s)